نواز شریف کی پی ٹی آئی کے دو اہم رہنمائوں کی نااہلی کی پیشگوئی

الیکشن کمیشن پر عائد کیے جانے والے الزامات کے بعد وفاقی وزرا فواد چوہدری اور اعظم سواتی کے سر پر نا اہلی کی تلوار لٹکنے لگی۔نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے سینئر صحافی عارف حمید بھٹی کا کہنا ہے کہ سابق وزیراعظم نوازشریف نے گذشتہ روز لندن میں کچھ لوگوں سے ملاقات کی ہے۔نوازشریف نے کچھ لوگوں کو یقین دلایا ہے کہ پاکستان میں آئینی بحران پیدا ہو سکتا ہے۔

ملاقات کرنے والوں میں سے ایک نے سوال کیا کہ بحران کیسے پیدا ہو گا۔جس پر نوازشریف نے بتایا کہ الیکشن کمیشن دو رہنمائوں کو نااہل قرار دے گا۔عارف حمید بھٹی نے دعویٰ کیا کہ نوازشریف نے کہا کہ الیکشن کمیشن فواد چوہدری اور اعظم سواتی کو نااہل کر دے گا،اب یہ سوچنے والی بات ہے کہ نوازشریف کو کس نے بتایا کہ الیکشن کمیشن پی ٹی آئی کے دو رہنمائوں کو نااہل کر دے گا۔خیال

رہے الیکشن کمیشن نے اپنے اوپر لگائے گئے تمام الزامات مسترد کرتے ہوئے اعظم سواتی سے ثبوت مانگنے کا فیصلہ کیا ہے ۔الیکشن کمیشن کا اہم اجلاس گزشتہ روز ہوا جس کی صدارت سکندر سلطان راجہ چیف الیکشن کمشنر آف پاکستان نے کی۔ اجلاس میں ممبران الیکشن کمیشن نثار احمد درانی ، اور شاہ محمد جتوئی کے علاوہ الیکشن کمیشن کے سینئر افسران شریک ہوئے۔ اجلاس میں الیکشن کمیشن

اور چیف الیکشن کمشنر پر لگائے گئے الزامات کو زیر بحث لایا گیا۔ الیکشن کمیشن نے ان الزامات کی پْرزور الفاظ میں تردید کی اور انہیں مسترد کردیا۔صدرپاکستان اور سینٹ سٹینڈنگ کمیٹی کی میٹنگ کے دوران وفاقی وزیر ریلوے محمد اعظم خان سواتی کی طرف سے الیکشن کمیشن پر جو الزامات عائد کیے گئے ہیں اْس پر اْن سے ثبوت مانگنے کا فیصلہ کیا گیا۔جاری اعلامیہ کے مطابق فواد چوہدری

کی طرف سے پریس بریفنگ کے دوران الیکشن کمیشن اور چیف الیکشن کمشنرپر جن الفاظ میں الزام تراشی کی گئی۔ اْس پر الیکشن کمیشن نے یہ فیصلہ کیا کہ دونوں وزراء کو نوٹس جاری کئے جائیں تاکہ اس سلسلے میں مزید کارروائی عمل میں لائی جاسکے۔ الیکشن کمیشن نے پیمرا
سے متعلقہ ریکارڈ بھی طلب کر لیا اور دفتر کو حکم دیا گیا کہ وہ ایوان صدر،سینٹ سٹینڈنگ کمیٹی کی کارروائی اور پریس بریفنگ سے متعلق تما م ریکارڈ مرتب کر کے مزید کارروائی کے لئے الیکشن کمیشن کے سامنے پیش کرے۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *