لوگ جنت میں جانا چاہتے ہیں مگر جنت میں جانے کے لئے لوگوں نے اچھے اعمال نہیں لانے، وزیراعظم عمران خان

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ بٹن دبا کر نیا پاکستان نہیں بن سکتا، یہ جدوجہد کا نام ہے،سسٹم بدلنے میں وقت لگتا ہے، کورونا کے دوران آئی ایم ایف کو فون کر کے کنسٹریشن سیکٹر کیلئے رعایت لی۔وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ ہم تعمیراتی شعبے کی مدد کریں گے، آپ ٹیکس دیں، کم قیمت مکان ہمارے ملک کی ضرورت ہے، لوگ جنت میں جانا چاہتے ہیں، مگر جنت میں جانے کے لیے

لوگوں نے اچھے اعمال نہیں لانے۔پاکستان پراپرٹی،ہاوسنگ اور کنسٹرکشن ایکسپوکی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ دیہاڑی دار لوگوں کو موقع ہی نہیں ملا کہ وہ اپنا گھر بنا سکیں۔ انہوں نے کہا کہ تاریخ میں پہلی بار عام آدمی کے پاس اپنا گھر ہو گا، ہاوسنگ سیکٹر کی ہرممکن مدد کریں گے۔ وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان میں تنخواہ دار طبقے کا کسی نے نہیں

سوچا تھا، وہ ملک ترقی نہیں کر سکتا جہاں چھوٹا سا طبقہ امیر اور زیادہ غریب ہوں، کمزور طبقے کو اوپر اٹھانا ترجیح ہے،حکومت کی کوشش ہے کہ زیادہ سے زیادہ چیزیں پاکستان میں بنیں۔وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان میں عام لوگوں کو گھر کی ضرورت ہے،گھر کی فراہمی کے لیے نیا پاکستان ہاوسنگ اسکیم شروع کی،قرضہ بینک دے گا،تعمیراتی شعبے میں تیزی سے ترقی ہورہی ہے،کنسٹرکشن

سیکٹر میں سب سے زیادہ روزگار کے مواقع ہوتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں مائنڈ سیٹ تبدیل کرنے کا کام شروع ہوگیا ہے،چین نے سب سے پہلے کمزورطبقے کی مدد کی،ایف بی آر میں اصلاحات لانے کی کوشش کررہے ہیں۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *